"> احتساب عدالت میں اسحاق ڈار کے خلاف کیس کی سماعت شروع | HamaraPedia.com window.dataLayer = window.dataLayer || []; function gtag(){dataLayer.push(arguments);} gtag('js', new Date()); gtag('config', 'UA-152948917-1');

احتساب عدالت میں اسحاق ڈار کے خلاف کیس کی سماعت شروع

اسلام آباد:(23اکتوبر 2017) اسحاق ڈار کے خلاف اثاثہ جات ریفرنس کیس سماعت کے موقع پر نیب کے گواہ عبدالرحمان گوندل نے اپنا بیان قلمبند کرا دیا ہے جبکہ نیب پراسیکیوٹر اور خواجہ حارث کے درمیان تلخ کلامی بھی ہوئی ہے ۔

تفصیلات کے مطابق اسلام آباد کی احتساب عدالت میں اثاثہ جات ریفرنس کیس کی سماعت شروع ہوگئی ہے،احتساب عدالت کے جج محمد بشیر نیب کی جانب سے اسحاق ڈار کے خلاف دائر آمد سے زائد اثاثے بنانے کے ریفرنس کی سماعت کر رہے ہیں۔

وزیر خزانہ اسحاق ڈار آج ساتویں مرتبہ احتساب عدالت میں پیش ہوئے جب کہ ان کے ہمراہ بیرسٹر ظفر اللہ، طارق فضل چوہدری اور رانا افضل بھی تھے۔

dar-nab

نیب کی جانب سے پیش کئے گئے گواہ عبدالرحمان گوندل نے اپنا بیان قلمبند کرادیا جن کا تعلق نجی بینک سے ہے، گواہ بینک افسر عبدالرحمان گوندل نے اپنے بیان میں کہا سترہ اگست کو دستاویز کے ساتھ نیب پیش ہوا، نیب نے جو ریکارڈ مانگا وہ جمع کرایا۔

عبدا لرحمان نے مزید کہا کہ کرنٹ بینک اکاؤنٹ اسحاق ڈار کے نام پر کھولا گیا، اکاؤنٹ پچیس مارچ دوہزار پانچ میں کھولا گیا، بارہ سال کی بینک اسٹیٹمنٹ نیب کو دی، اس موقع پر اسحاق ڈار کے وکیل خواجہ حارث نے گواہ پر جرح کی۔

خواجہ حارث نے سماعت کے دوران کہا کہ گواہ ماہر بھی ہے اور سمجھ دار بھی ہے، نیب پراسیکیوٹر کیوں بار بار مداخلت کررہے ہیں جس پر نیب پراسیکیوٹر نے کہا کہ آپ ایسے حملے نہ کریں، میں سینئروکیل ہوں۔

خواجہ حارث نے سماعت کے دوران کہا کہ گواہ ماہر بھی ہے اور سمجھ دار بھی ہے، نیب پراسیکیوٹر کیوں بار بار مداخلت کررہے ہیں جس پر نیب پراسیکیوٹر نے کہا کہ آپ ایسے حملے نہ کریں، میں سینئروکیل ہوں۔

خواجہ حارث نے کہا کہ دستاویزات گواہ خود پڑھ رہا ہے میں نے خود کوئی مداخلت نہیں کی، گواہ سے سوال کرنا میرا حق ہے۔ انہوں نے کہا کہ آپ گواہ کو کچھ نہ بتائیں۔

You may also like...

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

This site uses Akismet to reduce spam. Learn how your comment data is processed.